Urdu Amazing Story Amawas Ka Ghulam

Urdu Amazing Story Amawas Ka Ghulam

The young man had a strange idol which was a source of power. This pearl took the young man from the floor to the heights and then as soon as this idol disappeared, the young man became alienated from common sense but then suddenly

اماوس کاغلام

نوجوان کے پاس ایک عجیب مورتی تھی جو کہ طاقت کا سرچشمہ تھی اس موتی نے نوجوان کو فرش سے بام عروج پر پہنچا دیا اور پھر اس مورتی کے غائب ہوتے ہی  وہ نوجوان عقل سلیم سے بیگانہ ہو گیا مگر پھر اچانک

اماوس کا غلام

اچنبھےمیں ڈالتی ہوئی ماورائی مخلوق کی ایک حقیقی داستان جو پڑھنے والوں کو حیرت میں ڈال دے گی

کچھ الفاظ ایسے ہوتے ہیں جن کو سننے کے لیے آپ کے کان ہمیشہ ترستے رہتے ہیں وہ الفاظ جن کو سننے سے جلترنگ سے بج اٹھیں جو کبھی ایک بار نہیں تو دل چاہے کہ بار بار سنتے ہی چلے جائیں۔لیکن یہ بھی ایک کڑوی حقیقت ہے کہ کچھ ایسے الفاظ بھی ہوتے ہیں جن کو ہمیں سننے سے سخت چڑ ہوتی ہے ہماری شدید خواہش ہوتی ہے کہ یہ الفاظ ہمیں کبھی نہ سننا پڑیں لیکن تجربہ یہ کہتا ہے کہ جس چیز کی آپ خواہش کریں وہ آپ کو کم ہی ملا کرتی ہے اور جس چیز سے آپ بھاگنا چاہیں تو وہ پھر آپ کے سامنے آ کھڑی ہوتی ہے میرے ساتھ بھی آج کل ایسا ہی ہو رہا تھا اور اس وقت تو میں سر سے پیر تک سن ہوکر رہ گیا جب چپراسی نے تیسری بار میری میز پر آ کر کہا باس نے بلایا ہے جی ہاں دوستو یہی ہے وہ مانوس الفاظ جنہیں سننے سے مجھے سخت چڑ تھی اور دیکھیے کہ روزانہ دن میں کئی بار میرے کانوں میں یہ الفاظ پگھلے ہوئے سیسے کی مانندانڈیلے جاتے تھے آپ کو یقینا اندازہ ہوگیا ہوگا کہ میرا باپ کس قسم کا ہوگا اور میرے روابط باس سے کس نوعیت کے ہوں گے چلو میں خود ہی وضاحت کیے دیتا ہوں کہ میرا باس ایک روایتی باس تھا جس کی نظر میں اس کے سوا سبھی نکمے سست اور کام چور تھے کسی کو بھی اپنے کمرے میں بلانے کا  بنیادی مقصد اسے ذلیل کرنا ہوتا تھا ما سوائے ان چند خوشامدی چمچوں کےجوباس کی شرٹ پر لگے سالن کے دھبےکی بھی تعریف کرتے نہیں تھکتے تھے پڑھئے ایک دلوں کو چیرتی اور دلوں کو پھارٹی ہوئی داستان

Page 1

اماوس کا غلام
اماوس کا غلام

Page 2
اماوس کا غلام
اماوس کا غلام

Page 3

اماوس کا غلام
اماوس کا غلام

Page 4

اماوس کا غلام
اماوس کا غلام

جاری ہے آئیندہ اگلی قسط میں

کہانی پسند آئے تو دوستوں کے ساتھ شئیر ضرور کریں 

Leave a Comment